کتاب’’ قندلِ علم‘‘ پر سنیئر صحافی اے حق کا تبصرہ

ادب(روزنامہ یورپ انٹرنیشنل)رانا عبدالرزاق خان صاحب کی کتاب’’ قندلِ علم‘‘ ایک ایسی کتاب ہے کہ جسے دیکھتے ہی یہ بات ذہن میں سماجاتی ہے ۔کہ اس کتاب میں سماجی ، سیاسی ، شخصیات کے بارے میں معلوماتی مضامین لکھے گئے رانا عبدالرزاق خان جو میرے لئے ایک بہت ہی قابل احترام شخصیت ہیں۔ جنہوں نے برطانیہ بلکہ ساری دنیا میں اپنی حد درجہ کاوشوں سے تھوڑے عرصہ میں ادبی حلقوں میں اپنا لوہا منوایا ہے،اس کی کہیں مثال نہیں ملتی۔اگر میں ان کی خدمات کو خراجِ تحسین پیش نہ کروں تو یہ زیادتی ہوگی ۔رانا عبدالرزاق خان کا مجھ پر ایک احسان یہ بھی ہے کہ انہوں نے طویل عرصہ تک یوکے ٹائمز میں مضامین اور کالمز لکھے ۔ اور گوشہ ادب کے بھی مدیر رہے ۔ان کے یہ مضامین آپ کو اس کتاب میں میسر ہیں۔ ان کی یہ خدمات بھی ایک نیکی سے کم نہیں ۔وہ عرصہ پانچ سال سے ماہنامہ’’ قندیل ادب انٹر نیشنل‘‘ بھی مسلسل نکالتے ہیں ۔اور ہر ماہ مشاعرے کا بھی التزام کرتے ہیں۔اُردو زبان کو جس طرح انہوں نے فروغ دیا جس کی تفصیل اگر میں لکھنا چاہوں تو بہت صفحات درکار ہیں ،ان کی اس کتاب’’ قندیلِ علم ‘‘میں مضامین بر جنرل اختر علی ملک، محسن پاکستان﴿ ظفراللہ خاں﴾،۔چودھری رحمت علی،۔ علامہ سر محمد اقبال،۔پروین شاکر،۔ قلندر مومند، ثاقب زیروی ،جناب عبیداللہ بیگ،حضرت حافظ شیرازی(رح)،۔عبیداللہ علیم ،سیّدامتیاز علی تاج،۔امیر مینائی،قائد اعظم ،۔ڈاکٹر فراز حامدی شعرائ کرام کی نظر میں۔۔حضرت مولانامحمد جلال الدین رومی(رح).،۔ بابائے اُردو مولوی عبدالحق صاحب،مبارک مونگیری ایک عظیم شاعر،۔ڈاکٹر عبدالسلام میری نظر میں، قائد اعظم محمد علی جناح(رح) اور مختلف مشاہیر کرام ،۔خان لیاقت علی خان،تحریک پاکستان میں خواتین کا کردار، جناب ایم ایم صاحب ، ڈاکٹر عبد السلام نوبل لارئیٹ،حضرت قائد اعظم(رح) اورچوہدری ظفر اللہ خان ، معمار قوم سر سید احمد خان ،حضرت قائد اعظم محمد علی جناح(رح) کا تصو ر پاکستان،سر گنگا رام،عبید اللہ علیم، ابوالکلام آزاد(رح)،۔محترمہ رتی بائی اہلیہ قائد اعظم، ڈاکٹر عبدالسلام اور پروفیسر سر ہوئیل،محمد علی جوہر،احمد سرہندی(رح) مجدد الف ثانی۔اُردو ادب سے متعلق بہت سے مضامین، پاکستان کی سیاست پر مثبت مگر تلخ تبصرے کئے ہیں ۔ ان تاریخی معلومات کو یکجا کیا ۔یہ سچے اور محب وطن لکھاری کی ہی نشانی ہے ۔ میں خوشامد اور چاپلوسی کی عادت سے مبرّا ہوں ۔ میں تفصیلی تعریف تو نہیں کر سکتا ۔رانا عبدالرزاق خان نے بعض مضامین پر جس وُسعت سے روشنی ڈالی ہے وہ ان ہی کا کام ہے ۔ رانا عبدالرزاق خان ایسے ایک سچے اور تلخ قلمکار ہیں کہ حقائق کو بلا جھجک پیش کرتے ہیں میں رانا عبدالرزاق خان کو اس کتاب کی رُونمائی پر مبارک باد پیش کرتا ہوں خدا تعالیٰ ہمیشہ رانا صاحب کو صحت مند رکھے اور لمبی فعال زندگی سے نوازے ۔آمین۔اے حق یوکے ٹائمز لندن